Archive for September, 2010

September 20, 2010

ہندوستان کے دس کڑور سے زائد محنت کشوں کی ہڑتال

تحریر:کامریڈ سائمن ہارڈی
ہندوستانی محنت کشوں نے 7ستمبر کو اپنی طاقت کا مظاہرہ کیا جب دس کروڑ سے زائد محنت کشوں نے ایک دن کی ہڑتال کی یہ پچھلے دو ماہ میں دوسری ہڑتال تھی ۔
جن دیگر محنت کشوں نے ستمبر کی ہڑتال میں شمولیت اختیار کی اس میں انشورنس،انجینرنگ،ٹیکسٹائل اور شپ بلڈنگ کے مزدور شامل تھے ۔ہڑتالیوں کی اکثریت کیریلا اور مغربی بنگال سے تعلق رکھتی تھی دونوں ریاستوں میں کیمیونسٹ پارٹی آف (مارکسٹ) کی حکومت ہے۔کیمونسٹ پارٹی کی محنت کشوں میں اہم حمایت موجود ہے لیکن اس پارٹی نے سرمایہ درانہ راستہ اختیار کر لیا ہے جس نے محنت کشوں اور کسانوں کی تحریکوں پر پچھلے چند سالوں میں بد ترین تشدد کیا ہے ۔

read more »

September 17, 2010

کشمیر میں نوجوانوں کی تحریک

ریاستی جبر و بربریت:
سرینگر کے علاقے راجوری میں 11جون کو مظاہرین کو منتشر کرتے ہوئے پولیس کا آنسو گیس کا گولا سترہ سالہ طفیل کے سر میں لگنے سے اس کی موت واقع ہوگئے ۔اس کے بعد سے شروع ہونے والے مظاہرے تین ماہ کے باوجود آج بھی جاری ہیں ۔پولیس کے تمام تر کرفیو کے باوجود ان کی شدت میں مسلسل اضافہ ہوتا چلاگیا اس صورتحال پر قابو پانے کے لئے بڑے پیمانے پر گرفتاریاں شروع ہوگئیں ۔ریاستی جبر اور بر بریت کے باوجود تحریک مسلسل مضبوط ہوتی جارہی ہے ۔تین ماہ کے عرصے میں تحریک کچلنے کی کوششوں میں کشمیری پولیس اور بھارتی فوج اب تک 90سے زائد کشمیریوں کو شہید اور بے شمارکو زخمی اور 2ہزار کے قریب گرفتار ہو چکے ہیں ۔

read more »

September 16, 2010

قرضوں کی ادائیگی سے انکار۔۔۔۔۔۔۔سیلاب زدگان کی امداد

حکمران طبقے نے ڈیموں فیکٹریوں ،پاور پلانٹ اور جاگیریں بچانے کے لئے سیلاب کا رخ غریب آبادی کی طرف کر دیا تھا ۔جس کو اس علاقوں کے لوگ سہہ رہے ہیں ہیں عوام نے دیکھ لیا ہے کہ کس طرح قدرت نہیں یہ حکمران طبقہ ہے جو ان کی بربادی کا باعث بنا ہے۔
بندھوں کو توڑنے پر عوامی نفرت اور غصہ اتنا شدید ہے کہ حکمران مجبور ہیں کہ اپنے ہی ساتھیوں کے خلاف تحقیقات کا اعلان کریں ۔

read more »

September 15, 2010

پی ٹی سی ایل کے 26ہزار محنت کشوں کی ہڑتال

(تحریر:رضا علی)
پی ٹی سی ایل کے 26ہزار محنت کش 16اگست سے ہڑتال پر ہیں ۔گرفتاریاں،تشدد اور تنخواہوں کی بندش کے باوجود ان کی پر عزم جدوجہد جاری ہیں ۔یہ جدوجہد محنت کش طبقے کے صلاحیت اور طاقت کا اظہار ہے ۔

read more »

September 14, 2010

حکمران طبقہ کا انقلاب۔۔۔۔نظام کا دفاع

مہنگائی،بیروزگاری،غربت،بھوک،بم دھماکوں،قتل عام اور ریاستی دہشت گردی نے عوام کی زندگی اجیرن بنادی ہے پچھلے چند سالوں میں ان کی شدت میں شدید اضافہ ہوا ہے اور اب سیلاب نے صورتحال کو اپنی انتہا پر پہنچا دیا ہے ۔عوام حکمرانوں سے شدید نفرت کا اظہار کر رہے ہیں اور یہ موجودہ نظام حکومت سے بھی مایوس ہیں حالانکہ 2007سے لے کر 2009تک وکلاء، سٹوڈنٹس ،سیاسی کارکناں نے آمریت کے خلاف جدوجہد میں حصہ لیا اور محنت کش عوام کے بڑے حصے کو بھی موجود نظام خاص کر ’’آزاد عدلیہ‘‘کے متعلق کافی خوش فہمیاں تھیں لیکن اب یہ بڑی حد تک ختم ہو رہی ہیں ۔

read more »

September 14, 2010

اہل تشیعوں کا قتل عام

لاہور میں اہل تشیع کے جلوس میں خود کش دھماکے ،کراچی میں اہل تشیع کے جلوس پر فائرنگ اور کوئٹہ میں یوم القدس کے موقع پر دھماکہ اور پھر ان مظلوم پر فائرنگ کر دی گئی جس کے نتیجے میں بڑے پیمانے پر ہلاکتیں ہوئیں ۔کوئٹہ کے معاملے پربہت حیران کن ہے کہ کیسے خود کش دھماکے کے بعد گھات لگا کران لوگوں کو مارا گیا۔یہ پچھلے ایک سال میں اہل تشیع پر لگاتار حملے ہیں ۔ان قتل و غارت گری کی ذمہ داری تو لشکر جھنگوی اور طالبان نے قبول کر لی ۔مگر یہ بہت واضح ہے کہ ریاستی پشت پناہی میں یہ قتل و عام ہو رہا ہے

read more »

September 8, 2010

مارکس اور اکیسویں صدی

تحریر: کامریڈ قیصرہ شوکت
میرے مضمون کا عنوان ہے ’’مارکس اور اکیسویں صدی ‘‘زندگی جو اس وقت گوں نا گوں مسائل کا شکار ہے ان مسائل کو سمجھنے کے لئے گردوپیش کے حالات اور واقعات پر نظر رکھنا ضروری ہے معاشرتی مسائل پر نظر ڈالیں تو ان لاکھوں بے روزگار نوجوانوں کی فوج میرے روبرو ہوتی ہیں جنہوں نے ڈگریاں حاصل کرنے کے لئے نجانے کتنے مصائب اٹھائے ۔ان کے غریب والدین نے اپنا پیٹ کاٹ کے ان کے تعلیمی اخراجات کو محض اس امید پر پورا کیا کہ ہمارے بچے مستقبل میں بر سر روزگار ہونگے تو ہمارے حالات بہتر ہونگے ان تمام تر کاوشوں اور کامیابی کے باوجود جب ان کو روزگار نہیں ملتا تو ہمارے یہ ہو نہار نوجوان جرائم کا راستہ اختیار کرتے ہیں ۔یہ ایک بڑا المیہ ہے ہمارے طبقاتی معاشرے کا اس طرح غربت جو پاکستان کے 80%طبقے کا مقدر بن چکی ہے اس مقدر کا سکندر اور کوئی نہیں سرمایہ درانہ نظام ہے جس کی لوٹ کھسوٹ نے غربت اور امارت کی تفریق کو بڑھادیا ہے اس پر ہمارے نا اہل حکمرانوں کی غلط پالیسیاں جو آئے دن ٹیکسوں میں اضافہ اور مہنگائی کا تحفہ دیتی ہے یہ ان پالیسیوں کے ثمرات ہیں جس نے غریب عوام سے تیل ،گیس،بجلی کے علاوہ روٹی تک چھین لی ہے

read more »