انقلابی سوشلسٹ موومنٹ کے زیراہتمام ’’عالمی سرمایہ داری کا بحران اور سوشلسٹ متبادل ‘‘ کے موضوع پر مذاکرہ

انقلابی سوشلسٹ موومنٹ کے زیراہتمام ’’عالمی سرمایہ داری کا بحران اور سوشلسٹ متبادل ‘‘ کے موضوع پر 2فروری بروز جمعرات مذاکرہ منعقد ہوا۔جس میں لیفٹ کے مختلف گرپوں کے دوستوں نے بڑئے پیمانے پر شرکت کی۔ راضوان خالق نے گفتگو ک�آآغاز کرتے ہوئے سرمایہ دارنہ نظام کے بحران اور اس کے نتجے میں جنم لینے والے عرب انقلابات اور قبضہ وال سٹریٹ پر بات کرتے ہوئے کہا کہ آج جب مارکسی نظریات کے تجزیے درست ثابت ہو رہے ہیں تو ان حالات میں بائیں بازو کو اپنی سیاست منظم کرنے کی ضرورت ہے اور ہماری آج کا مذاکرہ اس سلسلے کی ایک کوشش ہے۔اس کے بعد کامریڈ شہزاد ارشد نے گفتگو کرتے ہوئے تفصیل سے سویت یونین کے خاتمہ کے بعد کے عہد پر روشنی ڈالی اور کہا کہ آج مارکس کے نظریات سچ ثابت ہورہے ہیں۔سرمایہ دارانہ میڈیا میں دوبارہ سے طبقاتی جدوجہد،انقلاب اور سوشلزم جسے الفاظ سامنے آرہے ہءں،بلکہ ٹائم جیسا سرمایہ دارنہ جریدہ کی ہیڈلائین یہ تھی کہ ’’مارکس کیا سوچ رہا ہے؟،‘‘یا پھر نیوزویک یہ کہنے پر مجبور ہو جاتا ہے کہ ’’ہم سب سوشلسٹ ہیں‘‘ اور سب سے بڑا کر 2011 جو انقلابات کاسال تھا جو عرب بلکہ پوری دنیا میں سماجی تضادات کو پوری شدت سے سامنے لے آیا اور ہم دیکھتے ہیں کہ امریکہ اور یورپ میں بڑئے پیمانے پر حکمران طبقے کے حملوں کے خلاف بڑی تحریکیں سامنے آئیں۔یونان میں 12عام ہڑتالیں ہوئیں جن میں سے دو48گھنٹوں پر مشتمل تھیں،برطانیہ میں 30نومبرکو1926بعد تاریخ کی سب سے بڑی ہڑتال ہوئی،سپین میں 15مئی کی تحریک اور سب سے بڑھکرقبضہ وال سٹریٹ موومنٹ جس نے پوری دنیا میں لوگوں کو سرمایہ دارانہ نظام کے استحصال اور جبر کے خلاف موبالائز کیا اور بڑئے پیمانے پر سرمایہ دارانہ مخالف شعور کو پیدا کیا، یہ صورتحال بائیں بازو کے لیے جہاں اہم ہے وہاں وہ ان سے سنجیدگی کا بھی تقاضا کرتی ہے کہ کیسے ہم تاریخ کے بدترین سرمایہ دارانہ بحران کا سوشلسٹ حل پیش کرئیں خاص کر ان حالات میں جب عالمی سطح پر انقلابی سوشلسٹ قوتیں ابھی کمزور ہیں۔کیسے لیفٹ باہم مل کر سرمایہ داری مخالف پارٹی تشکیل دئے سکتا ہے جو نہ صرف حکمران طبقے کے حملوں کی مزاحمت کرئے بلکہ موجودہ نظام کا خاتمہ کردئے۔پرویز پارہ نے بات کرتے ہوئے عالمی طور پر تبدیل ہوتی ہوئی صورتحال پر گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ مارکسٹوں کو آپس میں سانجھ پیدا کرنے کی ضرورت ہے۔ارشد منظور نے انقلابی شاعری سنائی جس کی حاضرین نے بہت داد دی۔ڈاکٹر شاہد مسعود نے گفتگو کرتے ہوئے سرمایہ دارانہ نظام کے استحصال پر تفصیل سے روشنی ڈالتے ہوئے کہا کہ یہ نظام حقیقت میں محنت کشوں کے لیے ہمشہ بحران کا نظام رہا ہے، جس نے ان کی زندگی اجیرن بنا رکھی۔شوکت چوہدری نے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ اس وقت محنت کشوں اور نوجوانوں میں سٹڈی سرکل کی ضرورت،ہمیں مل کر اس کا آغاز کرنے کی ضرورت ہے،اس کے علاوہ ہمیں محنت کشوں اور نوجوانوں میں اپنے کام کو فروغ دینے کی ضرورت ہے۔کامریڈ خالد شیخ نے کہا ہمیں نوجوانوں میں کام کرنے کی ضرورت ہے اور اپنے حالات کے مطابق کام کی حکمت عملی تشکیل دینے کی ضرورت ہے۔اشتیاق ایڈوکیٹ نے بات کرتے ہوئے کہا کہ اس وقت لیفٹ آگنائز سطح پر تو کمزور ہے، لیکن پچھلے عرصے میں مھنت کشوں ،کسانوں اور مختلف طاقتور تحریکوں نے جنم لیا ہے۔لیفٹ کو ان سے مضبوط تعلقات قائم کرنے کی ضرورت ہے۔احسن رضا نے کہا کہ آج کے حالات میں لیفٹ کے پاس کام کے وسیع مواقعے ہیں ہماری کام کی حکمت عملی میں انٹرنیشنل ازم کی بنیادی اہمیت ہے،ہمیں عالمی مزدور تحریک سے سانجھ پیدا کرنے کی ضرورتہے۔کامریڈ خالد نے کہا بائیں بازو کو آج جد ید ٹیکانولوجی کا استعمال کرتے ہوئے اپنے نطریات کو عوام میں مقبول بنانا ہوگا اور اس کے فنانس کو منظم کرنے کی ضرورت ہے، تاکہ ہم سرمایہ داری کے چیلنجیز کا مقابلہ کرسکیں۔کامریڈ ارفعان نے کہا کہ ہمیں رجعتیت کے خلاف واضح حکمت عملی کی ضرورت ہے یہ ہمارے راستے کا اہم مسلہ ہے۔مسرت بٹ نے کہا لیفٹ کونظام پر اپنی تنقید کو بنیاد بنانے کی ضرورت ہے نہ کہ بجا طور مذاہب ہدف تنقید بنایا جائے،یہ صورتحال ہمارے کا میں رکاوٹ بن رہی ہے۔ آخر میں کامریڈ شہزاد نے سم اپ کرتے ہوئے کہا کہ ہماری اس میٹنگ کا مقصد سرمایہ داری مخالف پارٹی کی تعمیر کے لیے بحث کا آغازہے۔یہ اس سلسلہ کہ پہلی میٹنگ ہے۔ہم اس حوالے سے بائیں بازو میں بحث کے لیے ڈاکومنٹ لکھیں گے اور نظریاتی جریدہ بھی جاری کرئیں کہ جن میں بائیں بازو کی سیاست کو درپیش مختلف مسائل تفصیلی مبحث ہوں تاکہ ہم کوئی آج کے عہد کے حوالے سے حکمت عملی اور پروگرام پر اتفاق رائے حاصل کرسکیں۔ پروگرام کا خاتمہ کامریڈ شفیق احمد شفیق کی انقلابی شاعری سے ہوا۔

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s

%d bloggers like this: